267

جماعت اسلامی کی کشمیر ریلی پر دستی بم حملہ،کونسی کالعدم تنظیم نے ذمہ داری قبول کرلی ؟ جان کر سیکیورٹی اداروں کے بھی کان کھڑے ہو جائیں گے

کراچی(ویب ڈیسک)کراچی میں یونیورسٹی روڈ پر بیت المکرم مسجد کے قریب جماعت اسلامی کی کشمیر ریلی میں ہونے والے دستی بم حملے کی ذمہ داری کالعدم سندھودیش روولیوشنری آرمی نے قبول کر لی ہے۔تفصیلات کے مطابق کراچی میں یونیورسٹی روڈ پر بیت المکرم مسجد کے قریب جماعت اسلامی کی کشمیر ریلی پر ہونے والے دستی بم حملے کی

ذمہ داری کالعدم سندھودیش روولیوشنری آرمی نے قبول کرتے ہوئے کہا ہے کہ سندھودیش روولیوشنری آرمی آج حسن سکوائر کراچی پر جماعتِ اسلامی کی کشمیر ریلی پر حملے کی ذمہ داری قبول کرتی ہے،سندھی قوم اپنی سرزمینِ سندھ پر کبھی بھی پاکستانی (پنجابی) قبضہ اور مذہبی انتہاپسندی قبول نہیں کرے گی۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر اپنے دوسرے ٹویٹ میں کالعدم سندھودیش روولیوشنری آرمی کا کہنا تھا کہ ایس آراے کراچی جماعت اسلامی کشمیر ریلی،کوٹری میں کشمیر ٹرین مارچ،پاکستان ایئر ڈفینس جانباز سینٹر کوٹری،ملیر ہالٹ کراچی پر رینجرز چوکی،کراچی کورنگی،ناصر کالونی میں پنجابی سیٹلرکی رانا سٹیٹ ایجنسی پر حملوں کی ذمہ داری قبول کرتی ہے۔یاد رہے کہ یوم استحصال کشمیر کے موقع پر شہر قائد کے علاقے گلشن اقبال میں جماعت اسلامی کی ریلی پر دستی بم حملہ کیا گیا جس کے نتیجے میں بچوں اور عورتوں سمیت 39افراد زخمی ہوئے جنہیں فوری طور پر مقامی ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جبکہ سیکیورٹی اداروں نے جائے حادثہ پر پہنچتے ہوئے شواہد اکٹھے کر لئےہیں اور تحقیقات کا دائرہ وسیع کردیا ہے۔ دوسری طرف امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نےمقامی ہسپتال میں زخمیوں کی عیادت کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےکہا ہے کہ پرامن ریلی پر بزدلانہ حملے میں ہمارے درجنوں لوگ شدید زخمی ہوئے ہیں، یہ بھارت اور را کا کارنامہ ہے،بزدلانہ کارروائیوں سے ہمارا راستہ نہیں روکا جا سکتا، جماعت اسلامی اس جدوجہد کو مزید تیز کرے گی۔

Source : HassanNissar

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں