292

بھارت خفیہ طور پر جان بچانے والی ادویات اور وٹامنڑ کی درآمد کس نے کی؟ وزیراعظم سخت برہم، معاملے کی تحقیقات کا حکم دیدیا

اسلام آباد ( ویب ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے بھارت سے ادویات درآمد کرنے کی تحقیقات کا حکم دے دیا، بھارت سے جان بچانے والی ادویات کی آڑ میں معمول کی ادویات اور وٹامنز کی درآمد کی گئی، وزیراعظم نے شہزاد اکبر کو تحقیقات کی ہدایت کردی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں ادویات درآمد کرنے کا اس وقت انکشاف ہوا جب بھارت سے مزید 429 ادویات درآمد کرنے کی سمری پیش ہوئی۔ سمری میں مزید ادویات درآمد کرنے کی سفارش کی گئی تھی ان ادویات میں لائف سیونگ اور ملٹی وٹامن ادویات بھی شامل تھیں۔ اجلاس میں جب بھارت سے معمول کی ادویات اور وٹامنز کی درآمد پر سوالات اٹھائے گئے تو معاون خصوصی ظفر مرزا اور سیکرٹری صحت لاجواب ہوگئے۔ ان سے سوال کیا گیا ہ بھارت سے درآمد ادویات کونسی ہیں؟ کیا تمام ادویات جان بچانے والی ہیں؟ جس پر ظفر مرزا نے کہا کہ فہرست کی تیاری میرے علم میں نہیں۔ جس پر وزیر اعظم عمران خان نے شہزاد اکبر کو ادویات اسکینڈل کی انکوائری کی ہدایت کردی ہے۔ واضح رہے بھارت ستمبر 2019ء میں تجارتی پابندیاں عائد کی گئی تھیں تو ادویات درآمد پر پابندی عائد نہیں کی گئی تھی لیکن بعد میں کابینہ اجلاس نے جان بچانے والی ادویات کی درآمد پر بھی پابندی عائد کردی تھی۔ ڈاکٹرظفرمرزا نے کہا کہ حکومت کوروناوائرس سے بچاؤ کیلئے قواعدوضوابط پرعملدرآمداورحفاظتی انتظامات کے بارے میں عوام کی آگاہی کیلئے ایک مہم شروع کرے گی، خوش قسمتی سے دنیا کے دیگر ممالک کے مقابلے میں پاکستان میں کورونا کے کیسز اوراموات کی تعداد کم ہے۔ ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ عوام سے اپیل کی کہ وہ ملک میں لاک ڈائون کی نرمی کے دوران قواعدوضوابط اورسماجی فاصلے کی پابندی کرکے بالغ نظری اورذمہ داری کا مظاہرہ کریں۔ انہوں نے رمضان کے مقدس مہینے میں مساجد میں محدود تعداد میں لوگوں کی آمد سے متعلق عوام کوآگاہ کرنے کے لئے علمائے کرام کے کردار کو سراہا۔

Source : HassanNissar

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں